Latest News Of Kashmir And Daily Newspaper

پوشن یودھا مثبت تبدیلی کے رہنما بنیں گے اور لوگوں کو غذائیت کے تعلق سے بیدار کرتے رہیں گے
آئی سی ڈی ایس ہر ماہ پوشن یودھاؤں کی کہانی میڈیا کے ساتھ شیئر کرے گی


پٹنہ / 30 ستمبر: تغذیہ کا مہینہ بدھ کو ختم ہوگیا۔ یہاں تک کہ کورونا انفیکشن کے چیلنجوں کے باوجود تغذیہ کی خوشگوار ہوا غذائیت کے مہینے کے دوران ہر گھر تک پہنچتی ر ہی ہے۔ یہاں تک کہ غذائیت کے مہینے کے اختتام کے بعدبھی بیداری کی یہ لہر جاری رہے گی۔ اب غذائیت سے متعلق پوشن یودھااپنے ہاتھوں میں بیداری کی کمان سنبھال لیں گے۔ یوں تو غذائیت پسند بہادر لوگوں کو آگاہ کرنے اور مستفید افراد کو تغذیہ بخش خدمات فراہم کرنے کے لئے دن رات کوشاں ہیں۔ لیکن اس بار غذائیت سے متعلق پوشن یودھاؤں کی جدوجہد اور معاشرے میں تبدیلی لانے کے جذبے کی کہانیوں سے کمیونٹی کو آگاہ ہوگی۔ غذائیت کا مہینہ ختم ہونے کے بعد آئی سی ڈی ایس نے ایک نئے اور انوکھے قدم کا اعلان کیا ہے۔ جس کے تحت ہر ماہ آئی سی ڈی ایس، غذائیت پسندوں بہادروں کی کہانی میڈیا کے ساتھ شیئر کرے گی۔
یہ غذائیت کے مہینے کا اختتام نہیں بلکہ آغاز ہے:آئی سی ڈی ایس، بہار کے ڈائریکٹر، آلوک کمار نے کہا کہ اگرچہ تغذیہ کا مہینہ بدھ کو ختم ہوچکا ہے۔ لیکن ابھی تک غذائیت کی مہم ختم نہیں ہوئی ہے۔ حتیٰ کہ کورونا انفیکشن کے دوران بھی لوگوں نے تغذیہ کے مہینے میں اپنی شرکت کو یقینی بنایا ہے، جسے ایک نئی شروعات کے طور پر دیکھا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ غذائی قلت سے لے کر غذائیت کی طرف جانے والے راستے میں بہت سارے چیلنجز ہیں، جن کے ساتھ تغذیہ کے بہادر، لوگوں کے لئے تغذیہ بخش راہیں ہموارکرنے کی جدوجہد کر رہے ہیں۔ بہت سے غذائیت پسند بہادر ہیں، جنہوں نے اپنے اپنے طور پر غذائیت کے شعبے میں بہتر کام کیا ہے اور وہ تبدیلی کے معمار بھی بن چکے ہیں۔ ان کی جدوجہد اور محنت کی کہانی لوگوں تک پہنچنی چاہئے۔ اس سے معاشرے میں تغذیہ سے متعلق شعور میں اضافہ ہوگا۔ اسی وقت پوشن یودھاؤں کے حوصلے بھی بڑھیں گے۔ لہٰذا آئی سی ڈی ایس نے فیصلہ کیا ہے کہ نیوٹریشن واریروں کی کہانی کو ہر ماہ میڈیا کے ساتھ شیئر کیا جائے گا۔
تبدیلی کی کہانی کارگر ثابت ہوگی:تبدیلی کی کہانی اپنے ساتھ خیالات کی نقل و حرکت رکھتی ہے۔ اگر یہ تبدیلی کسی مثبت مقصد کے لئے ہو، تو اس میں عوامی تحریک میں بدلنے کی بھی صلاحیت ہوتی ہے۔ تغذیاتی مہم کا مقصد عوام کی شرکت میں اضافہ اور تغذیہ کو بڑے پیمانے پر نقل و حرکت میں تبدیل کرنا ہے۔ اس سمت میں پوشن یودھاؤں کی کہانی ایک اہم کردار ادا کرسکتی ہے۔